کراچی سے ایم کیو ایم کی جیت

Posted on December 8, 2015



کراچی سے ایم کیو ایم کی جیت۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ملک ریاست

” جیسی عوام ویسے حکمران” کی اعلی ترین مثال کراچی میں سامنے آئی ہے، 2 سال سے کراچی میں جاری اپریشن کی وجہ سے اہل کراچی نے سکھ کا سانس لیا ہے، لوگ سرشام باہر نکنا شروع ہو گئے ہیں، خوف کے بادل کسی حد تک چھٹ چکے ہیں ، کرپشن تو اپنی جگہ موجود پر بھتہ خوری اور اغوا برائے تاوان کی کیسز کم ہو گئے ہیں ، زبردستی دکانیں بند کرانے کا سلسلہ اب قصہ پارینہ بن چکا ہے۔۔۔۔ پورے ملک کے باسیوں سمیت عالمی سکیورٹی اداروں نے بھی کراچی کے حالات کو بہتر اور تسلی بخش قرار دیا ہے۔۔۔۔۔۔
کراچی پاکستانی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حثیت رکھتا ہے، پاکستان بغیر کراچی کے تصور سے بھی محال ہے، اب بات کرتے ہیں کہ کراچی کے امن و سکون کو کس نے خراب کیا ، وہ کون لوگ ہیں جہنوں نے شہر قائد کو دوزخ بنایا، رہائشیوں کا سکون غارت کیا، کاروبار تباہ کر کے ملکی معیشت کو اربوں کھربوں کاناقابل تلافی نقصان پہنچایا،ہزاروں افراد کو قتل کیا گیا؟ اتنے افراد پورے پاکستان میں دہشت گردی کا شکار نہیں ہوئے جتنے صرف کراچی میں ہوئے ہیں۔۔۔۔۔
سوال پیدا ہوتا ہے کہ آخر ان سب جرائم کے پیچھے کون تھا کس کی سرپرستی میں یہ آگ و خون کی ہولی کھیلی گئی۔۔۔ وہ کوئی اور نہیں صرف ایم کیو ایم ہے، یہ میں نہیں کہہ رہا سیکورٹی ادارے کہتے ہیں ، ٹارگٹ کلر گرفتار ہوتا ہے تو اس کا تعلق ایم کیو ایم سے، بھتہ خور پکڑا جاتا ہے تو تعلق ایم کیو ایم سے، سمگلر پکڑا جاتا ہے تو تعلق ایم کیو ایم سے، منی لانڈرنگ ہو تو تعلق ایم کیو ایم سے۔۔۔۔۔۔۔
اتنا سب کچھ دیکھنے، سننے کے بعد اہل کراچی ضرور سوچتے کہ آخر ہم یہ کیا کر رہے ہیں کیا ہم بھتہ دینے سے تھکے نہیں ،کیا قتل وغارت دیکھ دیکھ کر جی نہیں بھرا جو ہم دوبارہ ایم کیو ایم کو ووٹ دیں۔۔۔۔ لیکن شہر قائد کے لوگ اگر اسی میں خوش ہیں تو ہم کیا کر سکتے ہیں۔۔۔
کراچی میں ایم کیو ایم کی جیت کے مختلف پہلو ہو سکتے ہیں یا تو لوگ ان کریملز سے خوش ہیں یا وہ خوف کی وجہ سے اپنا حق دہی اسعتمال نہیں کر سکتے۔۔ ان پہلووں کا جائزہ لینا چاہیے کہ آخر وجہ کیا ہے اس قدر جرائم میں ملوث ہونے کے باوجود اتنی واضح اکثریت اور وہ بھی بغیر کسی محنت مشقت کے؟
آخر میں ہم علی زیدی کے بیان کی بھر پورالفاظ میں تائید کرتے ہیں کہ” جن لوگوں نے ایم کیو ایم کو ووٹ دیا ان کو شرم آنی چاہیے”