اقبال ڈے سپیشل

Posted on November 9, 2015



اقبال ڈے سپیشل۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ملک ریاست
9 نومبر یعنی “اقبال ڈے” کی چھٹی کو منسوخ کر دیا گیا ہے۔۔۔ فرض شناص اور دن رات محنت پے یقین رکھنے والی حکومت کہتی ہے ملک میں اگے ہی بہت چھٹیاں ہیں اس لیے یہ چھٹی منسوخ کی گئی ہے۔۔۔۔۔ اگر یہ چھٹی بھی دی گئی تو ملک و قوم کا بہت حرج ہو جائے گا۔۔۔۔۔
اس کے ساتھ ساتھ حسن نثار جیسے صحافت کے گند اور لبرل فاشٹ جن کا قبلہ و کعبہ روس ہے انھیں بھلا اقبال جیسا اللہ کا ولی کیے برداشت ہو گا؟ اسی لیے یہ کہتے ہیں کہ اقبال ڈے منانے سے ہمیں کیا فائدہ ہو گا؟
تو جناب والا ذرہ بتائیے کہ
کشمیر ڈے منانے سے ہمیں کیا فائدہ ہوتا ہے؟
مزدور ڈے منانے سے مزدور کو کیا فائدہ ہوتا ہے؟
قائداعظم ڈے منانے سے ہمیں کیا فائدہ ہوتا ہے؟
ان کو بھی چھوڑیئے ذرہ یہ بتایَے کہ
پاکستان ڈے منا کے ہم کون سا تیر مار لیتے ہیں۔۔۔؟
یہ کیوں نہیں کہتے ہو کہ پاکستان بننا تھا تو بس بن گیا ۔۔۔ اب پر سال یہ چھٹیاں کرنے سے بھلا کیا فائدہ ہو گا؟
تو سنو جناب فائدہ کچھ نہیں ہوتا ۔۔۔ صرف یہ ہوتا ہے کہ جذبے زندہ رہتے ہیں، اس میں نئی جہت آتی ہے، آنے والی نسلوں کو اپنی بزرگوں کی قربانیوں سے ادراک حاصل ہوتا ہے۔۔۔۔ آزادی سے قبل محرومی کے حالات یاد کر کے آزادی کا احساس دلایا جاتا ہے۔۔۔۔۔۔ اور سب سے بڑھ کر زندہ قومیں اپنے ہیروں کو کبھی فراموش نہیں کرتی۔۔۔۔۔۔۔۔۔
اور کچھ معیشت کے ہمدرد فرماتے ہیں کہ یہ جو اقبال ڈے کی رٹ لگائے بیھٹے ہیں انھیں کیا پتہ معیشت کا کتنا نقصان ہو جائے گا ایک دن میں؟
تو سنو یقینا قوم کو نہیں پتہ کہ ایک دن میں معیشت کیا کتنا نقصان ہو گا لیکن انتا ضرور پتہ ہے حکمرانون کی کرپشن سے کم ہوگا۔۔۔ایک ایک پروجیکٹ پر اربوں کی خرد برد کا بھلا عوام کو کیا پتہ؟
اگر اس ملک کی ستیاناس ہو چکی ہے تو اس میں ان 8 ،10 چھٹیوں کا کوئی قصور نہیں۔۔۔۔۔۔ اگر قصور ہے تو سیاستدانون کی کرپشن اور بدعنوانی کا ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
سوال یہ ہے کہ اگر یہاں قومی سیاستنانوں کے ڈے منائے جا سکتے ہیں تومفکر پاکستان ، برصغیر پاک وہند کے عطیم انقلابی لیڈر جس نے مسلمانوں میں آزادی کی نئی روح پھونکی اس عظیم مرتبت شخص کا ڈے کیوں سرکاری سطح پر نہیں منایا جا سکتا ۔۔۔۔۔۔۔؟
چند دن پہلے وزیراعظم پاکستان نے اپنے مغربی اقاّوں کو خوش کرنے کے لیے اپنے ایک خطاب میں اندیہ دیا تھا کہ” آنے والا پاکستان ایک لبرل پاکستان ہوگا”۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
میں کہنے میں حق بجانب ہوں کہ خدا نخواستہ اقبال ڈے کی چھٹی بھی لبرل ازم کی جانب پہلے قدم ہے؟ کیوں کہ لبرل پاکستان میں اور اقبال کے پاکستان میں زمین و اسمان کا فرق ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ شکریہ