غم

Posted on August 21, 2015



غم ۔۔۔۔۔ ملک ریاست
انسان کو اللہ تعالی نے بھول جانے کی خاصیت سے نوازہ ہے۔۔۔ اگر انسان اپنے غم اور مشکل وقت کو نہ بھول پاتا تو نظام زندگی تقریبا ختم ہو کے رہ جاتا۔۔۔
یہ انسان ہی ہے کہ بڑے سے بڑے حادثوں سے نکل کر کچھ عرصہ غم اور صدمے کی کیفیت میں رہنےکے بعد خوش وخرم زندگی گزارتا ہے ۔۔۔۔
بسا اوقات کچھ حادثے ایسے بھی پیش آتےہیں کہ جن کو بھول جانا ناممکن ہو ۔۔۔۔۔۔ وہ ایسے ہی زہنوں میں نقش ہوتے ہیں کہ جتنی بھی کوشش کی جائے وہ دل و دماغ سے نہیں نکل پاتے۔۔۔۔۔۔۔۔
انسانوں کی زندگی میں غموں اور پریشانیوں کا آنا کوئی نئی یا معیوب بات نہیں۔۔۔۔ سارے غم وقتی شدید ہوتے ہیں لیکن انسان کے حوصلے اور بلند عزم کے اگے کوئی چیز نہیں ۔۔۔۔ اگر وہ ہمت سے کام لے تو ایک مدت کے بعد سب ٹھیک ہو جاتا ہے لیکن اگر وہ خود ہمت نہ کرے تو یہ غم زندگی کا روگ بن جاتے ہیں ۔۔۔۔۔۔ اور روگ انسان کو ایسے کھاتا ہے جیسے اگ لکڑی کو۔۔۔۔۔۔
زندگی بہت پیاری چیز ہے اس لیے غم تو آنے جانے ہیں لیکن غموں کو زندگی کا روگ نہ بنائیں ۔۔۔۔۔۔۔۔۔شکریہ
جو کچھ لکھنا چاہ رہا تھا ۔۔ اس میں مکمل طورپر ناکام رہا ۔۔۔۔۔ کیوںکہ
بہت مشکل ہے محبت کی کہانی لکھنا
جیسے پانی پے پانی سے پانی لکھنا