Metro Bus Project Workers Didn’t Got Their Salaries From 3 Months

Posted on June 14, 2015



راولپنڈی اسلام آباد میٹرو منصوبے پر کام کرنے والے درجنوں ملازمین 3 ماہ سے تنخواہوں سے محروم

52e1eede1f844

راولپنڈی: میٹرو بس سروس کے منصوبے پر کام کرنے والے ملازمین نے نجی کمپنی کی طرف سے 3 ماہ کی تنخواہیں نہ ملنے پر میٹرو بس سروس بند کرنے کی دھمکی دے دی ہے۔
راولپنڈی اسلام آباد میٹرو بس منصوبے پر کام کرنے والے مزدوروں نے احتجاج کے دوران کہا کہ میٹرو منصوبے میں کام کرنے والی نجی کمپنی نے 3 ماہ کی تنخواہ ادا نہیں کیں

جس کی وجہ سے ان کے گھروں میں فاقوں کی نوبت آگئی ہے۔ ایک جانب لوگ آرام دہ بسوں پر سفر کرتے ہیں اور ان کے گھر والے سٹرکوں پر دھکے کھانے پر مجبور ہیں۔

ملازمین کا کہنا تھا کہ منصوبے کے سربراہ حنیف عباسی ان کا فون تک نہیں اٹھاتے اور اگر ان کے گھر جائیں تو ملازمین جھوٹ بول کر ٹال دیتے ہیں۔ اگر نجی کمپینی نے ان کی تنخواہیں ادا نہ کی تو وہ حنیف عباسی کے گھر کے باہر دھرنا دیں گے اور میٹرو بس سروس کو بند کردیں گے۔

واضح رہے کہ 40 ارب روپے سے زائد کی لاگت سے بننے والی راولپنڈی اسلام آباد میٹرو منصوبے کا افتتاح رواں ماہ ہی وزیر اعظم نواز شریف نے کیا ہے