مار نہی پیار صرف کہنے کی حد تک ہی کیوں ؟؟؟

Posted on April 2, 2014



میں اس بلاگ کے توسط سے عزت ما ب خآدَم اعلی شہباز شریف سے ایک التجا کرنا چاہتی ہوں ک آپ کو الله اور اس کے رسول کا واسطہ کچھ توجہ ہمارے جلالپور جٹاں کے گورنمنٹ گرلز اسلامیہ ہائی اسکول پر بھی دیں جہاں پر تمام اساتذہ بشمول مس ثمینہ اور مس شمع بچوں کو اس بے دردی سے مارتی ہیں کے بچیاں نفسیاتی مسایل کا شکار ہو کر رہ گیئں ہیں یہاں پر آپ سے سوال ہے کہ کہاں گیا آپ کا سلوگو مار نہی پیار
آپ نے اردو نصاب بدل کر انگلش نصاب کر دیا یہ ایک اچھا قدم ہے لیکن کیا آپ نے اس بات کو بھی جانچا کہ ٹیچرز اس نصاب کو پڑھانے کی اہلیت بھی رکھتی ہیں کہ نہیں
میں آپکو دعوت دیتی ہوں کہ اس اسکول کا ایک دورہ کریں کیوں کہ ٹیچرز کی قابلیت اور ان کا رویہ دونوں بے شرمی اور ہٹ دھرمی کا منہ بولتا ثبوت ہیں
ان جہالت زدہ ٹیچرز سے بچیوں کا مستقبل تباہ ہو رہا ہے خدا راہ کچھ تو کیجیے